ہفتہ 22 ربیع الثانی 1443ﻫ - 27 نومبر 2021

امریکی جمہوریت زوال پذیر، صحت کے نظام میں چین سے بہت پیچھے ہے: چینی حکومت

بیجنگ( پرو اردو)چین نے کہا ہے کہ امریکہ میں جمہوریت مررہی ہے اور اعلان کیا ہے کہ واشنگٹن بیماریوں سے نمٹنے میں چین کے پاس بنی نہیں پھٹکتا. چین کے سرکاری اخبار گلوبل ٹائمز میں شائع متعدد مضامین میں امریکی جمہوریت اور بیماریوں سے مقابلہ کرنے کی اس کی صلاحیتوں پر سخت نکتہ چینی کی گئی ہے. واضح رہے کہ “ گلوبلُ ٹائمز” کو چینی حکومت کے موقف کا آینہ دار کہا جاتا ہے اور اس میں شائع اداریہ اور مضامین کو چینی حکومت کی ترجمانی بھی تصور کیا جاتا ہے.امریکہ کے کنزویٹو آن لائن اخبار Breibart کی ایک رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ چین کے شہر ووہان کو دنیا بھر میں تباہی پھیلانے والے کورونا وائرس کا مرکز ہے جس نے انسانیت کو سنگین خطرے سے دوچار کردیا ہے.کہا جاتا ہے چین نے کورونا سے متعلق معلومات شئیر کرنے کی کوشش کرنے پر ڈاکٹرز اور دیگر کو سخت سزائیں دی ہیں.عالمی ذرائع ابلاغ بعض ماہرین کے حوالے سے دعوی کرتے ہیں کہ اگر چین کی کمیونسٹ پارٹی سینسر شپ کی سخت ترین پالیسی اختیار نہ کرتی تو دنیا بھر میں وائرس پر قابو پایا جا سکتا تھا.چینی حکومت سرکاری طور پر کورونا کا مرکز ملک ہونے کے الزام سے انکاری ہے تاہم وہ اپنے تردید کا ٹھوس جواز پیش کرنے سے قاصر ہے.اس کے برعکس چینی وزارت خارجہ کے حکام امریکی فوج پر الزام عائد کرتے ہیں کہ اس نے وائرس لیبارٹری میں تیار کیا تھا. گلوبل ٹائمز نے اپنی تازہ اشاعت میں کہا ہے کہ امریکی ایمپائر اپنے ہی بوجھ تلے ھر رہی ہے.مضامین میں امریکہ میں اموات کے سرکاری اعداد وشمار کو غلط قرار دیتے ہوئے کہا گیا ہے کہ چین نے ہیلتھ سسٹم کے اعتبار سے امریکہ پر اپنی برتری ثابت کردی ہے.

یہ بھی دیکھیں

سعودی عرب: دہشت گردی میں ملوّث داعش کے پانچ مشتبہ ارکان کو سزائے موت کا حکم۔ 

سعودی عرب: دہشت گردی میں ملوّث داعش کے پانچ مشتبہ ارکان کو سزائے موت کا …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے