اتوار 1 جمادی الاول 1443ﻫ - 5 دسمبر 2021

علمائے کرام کی ائمہ مساجد کی گرفتاری اور ہتھکڑیاں لگا کر مجرموں کی طرح پیش کرنے کی شدید مذمت

کراچی، علماء ایکشن کمیٹی کے رہنماؤں قاری محمد عثمان،مولانا اعجاز مصطفی،مولانا محمد طیب، ڈاکٹر قاسم محمود، قاری اللہ داد، حافظ حماد مدنی اور دیگر رہنماؤں نے طویل مشاورت کے بعد ائمہ مساجد کی گرفتاری اور ہتھکڑیاں لگا کر مجرموں کی طرح پیش کرنے کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہاکہ کرونا وائرس سے بچاؤکیلئے حکومت سندھ کے اقدامات اور احتیاطی تدابیر پر عملدرآمد کیلئے تمام مکاتب کی طرف سے 12 رکنی کمیٹی بنائی ہوئی ہے۔جہاں حکومت کو مشکلات کا سامنا ہوتا تو کمیٹی سے مدد لی جانی چاہیے مگر اسکے برعکس آئے روز مرکزی حکومت اور صوبائی حکومت کے موقف میں تضاد سامنے آرہاہے۔دوسری طرف زبردستی لوگوں کو کرونا وائرس کے مریض بنانے کی رپورٹس بھی حقیقت بن کر عام ہورہی ہیں جو بہرحال سوالیہ نشان ہے۔ علماء کرام نے کہا کہ صوبائی حکومت فوری طور پر ائمہ مساجد کے ساتھ روا رکھا جانے والا توہین آمیز رویہ بند کرکے تمام مکاتب فکر کی 12 رکنی کمیٹی سے رجوع کرے تاکہ اس مسئلہ کو خوش اسلوبی سے حل کیا جاسکے۔ انہوں نے کہا کہ پابندی کا اطلاق صرف مساجد پر کرنا عذاب الہی کو دعوت دینے کے مترادف ہے۔ رمضان المبارک میں فرائض 70 گنا اور نوافل فرائض کے برابر ہوجاتے ہیں۔عوام کو مساجد سے روکنے کیلئے قوت نافذہ کی ضرورت ہے جو ائمہ مساجد کے اختیار میں نہیں ہے لہذا اسکا ذمہ دار مسجد کا امام قطعی طور پر نہیں ہوسکتا، یہ ریاست اور اسٹیٹ کی ذمہ داری ہے۔ اگر انصاف نام کی کوئی چیز ہوتی تو پیر آباد اور لیاقت آباد سمیت کئی علاقوں کے ایس ایچ اوز جیل میں ہوتے۔ علماء کرام نے کہا کہ سندھ حکومت نے اگر نظریہ ضرورت کے تحت مستقبل قریب میں کچھ اقدامات کرنے کی کوشش کی تو پھر یہ سارا دورانیہ مشکوک ہوکر رہ جائے گا۔ علماء کرام نے کہا کہ شہری ائمہ مساجد کی تذلیل اور رسوائی کو برداشت نہیں کرسکتے۔ حکومت سندھ سنجیدگی کا مظاہرہ کرتے ہوئے 12 رکنی کمیٹی سے رجوع کرتے ہوئے آدھا تیتر آدھا بٹیر کے بجائے پورے صوبہ سندھ میں سب کیلئے ایک ہی قانون بنائے۔ لاک ڈاؤن صرف مساجد کیلئے نہ ہو جہاں صرف 15 منٹ لوگ عبادت کرکے گھروں کو چلے جاتے ہیں۔ باقی تمام بازاروں اور منڈیوں کا جو منظر پیش کیا جارہا ہے وہاں حکومتی رٹ کیوں خاموش ہے۔

یہ بھی دیکھیں

وزیراعظم عمران خان کا بے گھر افراد کو چھت کی فراہمی کا وعدہ پورا ہونے لگا۔ 

وزیراعظم عمران خان کا بے گھر افراد کو چھت کی فراہمی کا وعدہ پورا ہونے …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے