پیر 13 صفر 1443ﻫ - 20 ستمبر 2021

کورونا وباءاوراس کے بعد کی صورتحال پر اعلی سطحی ایف ایف ڈی تقریب آج منعقد ہوگی، وزیراعظم عمران خان خطاب کریں گے

کورونا وباءاوراس کے بعد کی صورتحال پر اعلی سطحی ایف ایف ڈی تقریب آج منعقد ہوگی، وزیراعظم عمران خان خطاب کریں گے

وزیراعظم عمران خان کورونا وباءاور اس کے بعد کے دور میں ترقی کے لئے سرمایہ کاری سے متعلق اعلی سطحی ورچوئل تقریب میں آج شرکت کریں گے۔

اس تقریب کی میزبانی کینیڈا، جمیکا اور اقوام متحدہ کے سیکریٹری جنرل کررہے ہیں۔ دنیا بھر سے چنیدہ سربراہان مملکت وحکومت اس اعلی سطحی تقریب میں مدعو کئے گئے ہیں۔

وزیراعظم عمران خان کے علاوہ، فرانس، جنوبی افریقہ، قزاخستان کے صدور، برطانیہ، جاپان، ناروے، اٹلی، آئیرلینڈ کے وزرا اعظم، جرمن چانسلر اور سعودی عرب کے ولی عہد اس اعلی سطحی تقریب سے خطاب کریں گے۔ ترقی پزیر ممالک کے قرض سے متعلق مسائل مالی امور سے متعلق ان چھ موضوعات میں شامل ہیں جن پر اعلی سطحی تقریب میں بات ہوگی۔

وزیراعظم عمران خان نے اپریل کے مہینے میں ’قرض میں ریلیف دینے کے عالمی اقدام‘ کا آغاز کیاتھا تاکہ ترقی پزیر ممالک کے لئے وسائل کی فراہمی کی گنجائش پیدا کی جائے تاکہ وہ کورونا وباءکے نتیجے میں درپیش موجودہ بحران سے موثر انداز میں نمٹ سکیں اور پائیدار معاشی ترقی کی بحالی ممکن ہوپائے۔ ان کے اس اقدام اور پاکستان کی قیادت میں ترقی پزیر اور ترقی یافتہ ممالک کے نمائندہ گروپ اور بڑے مالیاتی اداروں نے اقوام متحدہ کی سائیڈ لائنز پراس موضوع پر غیررسمی صلاح مشورہ شروع کیا تاکہ بعض امور اور ان عملی اقدامات پر اتفاق رائے پیدا ہو جن کے ذریعے ترقی پزیر ممالک کو درپیش قرض کے مسئلہ سے نبردآزما ہواجاسکے۔

اس اعلی سطحی تقریب میں وزیراعظم عمران خان اپنے وژن سے آگاہ کریں گے کہ کس طرح قرض کے مسئلے اور ترقی پزیر ممالک کودرپیش شدید مالی مشکلات سے نمٹا جاسکتا ہے۔

وزیراعظم عمران خان کو اس تقریب میں شرکت کی دعوت ترقی پزیر ممالک کے مخلص ترجمان کے طورپر ان کے کردار اور غریب ممالک کو قرض کے دباو سے نجات کے اجتماعی حل کے ان کے بروقت مطالبے کے اعتراف کا مظہر ہے۔ اس اعتراف نے پاکستان کو یہ موقع فراہم کیا ہے کہ وہ بڑی معاشی واقتصادی طاقتوں سمیت معتبر ممالک کے گروپ کے ساتھ مل کرقرض کے مسئلے کو حل کرے۔

قرض، لیکویڈٹی، سرمایہ کاری اور پائیدار ترقی جیسے کلیدی مسائل کے حل کے لئے وزیراعظم عمران خان کے قائدانہ کردار سے پاکستان اور دیگر ترقی پزیر ممالک کے لئے امکانات میں بے انتہاءاضافہ ہوا ہے کہ وہ عالمی حمایت، یک جہتی اور تعاون حاصل کریں جس کی انہیں اس وقت اشد ضرورت ہے تاکہ ایک صدی قبل آنے والی بدترین عالمی کساد بازاری کے بعد سے درپیش موجودہ شدید معاشی بحران سے دنیا کی تیزی کے ساتھ بحالی کی طرف واپسی یقینی ہوسکے

یہ بھی دیکھیں

وزارتِ مذہبی امور نے کرونا وبا ء کےسلوگن کے حوالے سے نوٹیفکیشن جاری کردیا۔  حکام مذہبی امور

وزارتِ مذہبی امور نے کرونا وبا ء کےسلوگن کے حوالے سے نوٹیفکیشن جاری کردیا۔  حکام …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے