پیر 20 صفر 1443ﻫ - 27 ستمبر 2021

نئی سرد جنگ عظیم کا اعلان


امریکہ کی گرتی ہوئی معیشت اور اجارہ داری کے ختم ہوتے ہی امریکی تھنک ٹینکس نے امریکی صدر کے ساتھ مل کر، دوسری سپر پاور چائنہ کے خلاف اعلان جنگ کرنے کا اعلان کر دیا۔
اس مرتبہ ہانگ کانگ کا بہانہ بنا کر حملہ آور ہونے کی سازش تیار کر لی گئی، جبکہ چینی دفاعی ماہرین کے مطابق وہ امریکہ کیلئے 1992 سے ہی ذہنی طور پر تیار ہیں کہ امریکہ خطہ میں بھارت اور دیگر اتحادیوں کے ساتھ مل کر اپنی جگہ بنانے کی ناممکن کوششوں میں لگا ہے۔
امریکی صدر نے، خواہ جو بھی ہو، انہوں نے کبھی کیمیائی ہتھیاروں کے نام پر مسلمان ریاست تباہ کی، کبھی داعش آئی۔ایس۔آئی۔ایس بنا کر مسلم امہ کو تباہ کیا، یا کبھی اس کرنل معمر قذافی کو بین الاقوامی دھشتگرد کہ کر ختم کیا جس کے دیس میں پٹرول و دیگر مراعات ناقابل یقین حد تک لیبیا کی عوام کیلئے ایک جنت تھیں۔
امریکی صدر کے تازہ وڈیو بیان کے مطابق چین سے ہر قسم کی سفری پابندیاں اور دیگر پابندیوں کے پس پردہ یہ بات بھی قابل ذکر ہے کہ امریکہ نے ابھی تک چین کے 1.1 ٹرلین ڈالر رقم واپس کرنی ہے جو چین کی ہزاروں کی تعداد میں ایکسپورٹ کی جاتی رہی، اور تجزیہ نگاروں کے مطابق امریکہ دنیا بھر میں اپنا ڈالر$ کرنسی نوٹ پھیلانے کی سازش میں بےنقاب ہوتا جا رہا ہے، اور اس ناکامی سے پیشتر امریکہ کو ہانگ کانگ جیسے نئے فرضی بہانوں سے ایک مرتبہ پھر کئی انسانی جانوں کیلئے خطرہ کی گھنٹی بجا دی۔
یہاں اس بات کا ذکر لازمی ہے کہ امریکی صدر کے بھارت کے دورہ سے قبل ایک مصدقہ اطلاع کے مطابق 25 ٹرلین ڈالر کو چھاپنے کا حکم دیا تھا، اور بعدازاں امریکی صدر کے بھارتی فضائی حدود چھوڑتے ہی سب سے پہلے 7 بھارتی چینلز سے کورونا کارڈ مارکیٹ کیا گیا، جوکہ تجزیہ نگار بخوبی مانیٹرنگ کرتے رہے، بعدازاں کورونا وائرس اور پھر آج سے دو روز قبل امریکی صدر کی جانب سے ایک نئی منطق کو امریکہ سمیت دنیا بھر کے میڈیا سے چلوایا گیا، جس میں کہا گیا تھا کہ نزلہ زکام (نیا نام کرونا) سے متعلق تمام پرانی انٹی بائٹک ادویات انسان کیلئے جان لیوا ثابت کر دی گئیں۔ تاہم اس بریکنگ نیوز نے دنیا کے متعدد تھنک ٹینکس نے بخوبی سمجھ لیا کہ کورونا دراصل امریکی کاروباری صدر کے بزنس کا ایک حصہ ہے، جسے امریکی صدر دنیا بھر میں میڈیا سے بہت جلد کامیاب کرنے کا ارادہ لے کر نکلے۔
تاہم دنیا بھر اور بالخصوص مسلم امہ کیلئے لمحہ فکریہ ہے، کہ جلد از جلد اپنی صفوں کو درست کریں، اور کم از کم پاکستان میں دشمن کے "ڈیوائیڈ اینڈ رول” Devide and Rule کلیہ کو بھانپیں، اور c میں بسنے والے ہر انسان کو باعزت پاکستانی سمجھیں اور آپس میں تفرقہ اور منافقت کی سیاست سے دور رکھیں، تاکہ ہم مزید مضبوط اور پوری قوم متحد ہو سکے

یہ بھی دیکھیں

وزارتِ مذہبی امور نے کرونا وبا ء کےسلوگن کے حوالے سے نوٹیفکیشن جاری کردیا۔  حکام مذہبی امور

وزارتِ مذہبی امور نے کرونا وبا ء کےسلوگن کے حوالے سے نوٹیفکیشن جاری کردیا۔  حکام …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے