اتوار 4 شوال 1442ﻫ - 16 مئی 2021

اقوام متحدہ کی انسانی حقوق کونسل کا منظم نسلی تشدد اور پولیس مظالم کا جائزہ لینے کے لئے خصوصی مباحثہ

نیویارک ( خصصوصی رپورٹ)اقوام متحدہ کی انسانی حقوق کونسل منظم نسل پرستی اور پولیس تشدد اور مظالم کے حوالے سے ایک خصوصی مباحثہ کا انعقاد کرے گی.تنظیم کے اعلامیہ کے مطابق مباحثہ کے انعقاد کی درخواست افریقی ملک برکینا فاسو نے 54 افریقی کی جانب سے کیا ہے. جنیوا میں انسانی حقوق کی کونسل کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ بدھ(18 جون) کومنعقدہ مباحثہ میں حالیہ نسلی منافرت کے باعث تشدد اور نفرت میں اضافے پر غور و خوض کیا جائےگا.حالیہ دنوں میں پولیس تشدد، پر امن مظاہروں کے خلاف طاقت کا استعمال اور ان جیسے غیر انسانی اقدامات میں اضافہ ہوا ہے اور ہر جگہ انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں کی شکایات بڑھی ہیں.مارچ میں کورونا وبا کے پھیلنے کے بعد اولین اجلاس سے خطاب کرتے ہوئےکونسل کی صدر ایلزیبتھ ٹسی فسلبرجر نے کہا کہ یہ ایشو محض امریکہ کے لیے مخصوص نہیں ہے بلکہ جہاں جہاں انسانی حقوق کی خلاف ورزیاں، منظم نسل پرستی ہورہی ہے وہاں کے لئے آواز بلند کی جائےگی.صدر ایلزبتھ نے کہا کہ آپ سب دیکھ سکتے ہیں کہ جینیوا سمیت دنیا بھر میں مظاہرے ہورہے ہیں لہذا اسے صرف امریکہ تک محدود کرنا قطعی مناسب نہیں ہے یورپ ایشیا، لاطینی امریکہ ہر جگہ اس وائرس نے تباہی پھیلائی ہے.امریکہ میں نسل پرستی کے خلاف مظاہروں میں تشدد اور پکڑ دھکڑ کے دوران انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزیوں کے اطلاعات ملیں ہیں.

یہ بھی دیکھیں

سعودی عرب: دہشت گردی میں ملوّث داعش کے پانچ مشتبہ ارکان کو سزائے موت کا حکم۔ 

سعودی عرب: دہشت گردی میں ملوّث داعش کے پانچ مشتبہ ارکان کو سزائے موت کا …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے