ہفتہ 10 ربیع الاول 1443ﻫ - 16 اکتوبر 2021

پنجاب میں ڈیجیٹل ڈرائیونگ لائسنس سسٹم متعارف

ڈیجیٹل پاکستان کی جانب ایک اور قدم بڑھاتے ہوئے پنجاب حکومت نے بغیر کسی کاغذی کارروائی کے ڈیجیٹل ڈرائیونگ لائسنس سسٹم متعارف کروادیا ہے۔
پاکستان میں یہ سسٹم پہلی بار متعارف کروایا جارہا ہے اور اس کا سہرا پنجاب میں تحریک انصاف کی حکومت کے سر جاتا ہے، آنے والے دور میں پنجاب میں ڈرائیونگ لائسنس کے اجراء کے سسٹم میں بہت سی مزید مثبت تبدیلیاں رونما ہوں گی۔
میڈیا رپورٹس کے مطابق پولیس آفیسر راولپنڈی اور پنجاب انفارمیشن ٹیکنالوجی بورڈ کے اشتراک سے یہ سسٹم متعارف کروایا گیا، اس سسٹم کے تحت صارف بغیر کاغذی دستاویزات کے چکر میں پڑے صرف شناختی کارڈ پر اپنا ڈرائیونگ لائسنس حاصل کرسکتا ہے۔
اس سسٹم کے تحت ایکسپائر لائسنس کے دوبارہ اجرا میں بھی بہت آسان ہوجائے گا، اور یہ عمل بھی ایک آٹو میٹڈ سسٹم کے تحت پورا ہوگا، نئے لائسنس حاصل کرنے والے صارفین کو سوائے شناختی کارڈ اور بینک چالان کے کسی قسم کی دستاویزات پیش کرنے کی مشکل کا سامنا نہیں کرنا پڑے گا۔
کورونا وائرس کی حالیہ وباء کے دوران اس سسٹم سے نئے اور پرانے لائسنس بنوانے والے ڈرائیورز کیلئے بہت سے مسائل دور ہوگئے ہیں، اس سسٹم سے سماجی فاصلے کو برقرار رکھنے میں 100 فیصد مدد ملے گی، اس سسٹم سے پولیس ڈیپارٹمنٹ بھی رش اور دیگر مسائل کا شکار ہوئے بغیر باآسانی لائسنس کا اجرا کرسکتا ہے۔
یاد رہے کہ حالیہ بجٹ میں حکومت ِ پاکستان نے موٹر ٹیکس میں کمی کرنے کا اعلان کیا تھا، بجٹ کے مطابق صارفین کو 31 اگست 2020 تک پورا ٹیکس جمع کروانے پر 20 فیصد کا ریفنڈ دیا جائے گا.
جبکہ پنجاب حکومت نے آن لائن چینلز کے ذریعے ٹیکس جمع کروانے پر 5 فیصد کی چھوٹ دی ہے.

یہ بھی دیکھیں

وزیراعظم عمران خان کا بے گھر افراد کو چھت کی فراہمی کا وعدہ پورا ہونے لگا۔ 

وزیراعظم عمران خان کا بے گھر افراد کو چھت کی فراہمی کا وعدہ پورا ہونے …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے