منگل 1 رمضان 1442ﻫ - 13 اپریل 2021

چائنہ کے بھگوان

انڈیا کے اخباروں میں آ رہا ہے کہ بھارت میں پوجا کے لیے گھروں اور مندروں میں رکھے گئے سبھی بھگوان چین سے درآمد شدہ ہیں. چائنہ کے بھگوان کوالٹی میں بہترین اور انتہائی سستے ھوتے ہیں. یہ دیکھنے میں بہت صفائی سے بنے ہوئے نظر آتے ہیں اور ان کی پائیداری بھی بیمثال ھے اتنی آسانی سے ٹوٹتے بھی نہیں اور خراب بھی نہیں ھوتے. لیکن اب بھارت میں پنڈتوں کی جانب سے یہ دعویٰ کیا جا رہا ہے کہ چین کے بھگوان دو نمبر ہیں اسی وجہ سے ھندوؤں کی دعائیں قبول نہیں ھو رہیں.. حکومت سے مطالبہ کیا گیا ہے کہ فوری طور پر چینی بھگوانوں کی درآمد پر پابندی عائد کی جائے اور بھارت میں چین کی طرز کے اعلیٰ کوالٹی کے اور سستے بھگوان بنانے کا سلسلہ شروع کیا جائے جبکہ دوسری جانب یہ کہا جا رہا ہے کہ بھارت میں اتنی کم قیمت میں اعلی کوالٹی کے اتنے پائیدار بھگوان بنانا ناممکن ھے.

یہ بھی دیکھیں

اسلام آباد :خواتین کے عالمی دن کے موقع پر پی ٹی آئی رہنماء عثمان ڈار کا پیغام۔ 

اسلام آباد :خواتین کے عالمی دن کے موقع پر پی ٹی آئی رہنماء عثمان ڈار …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے