ہفتہ 10 ربیع الاول 1443ﻫ - 16 اکتوبر 2021

بھارت:فاشسٹ مودی حکومت کا سکھوں کے خلاف تازہ ترین اقدام ، 40ویب سائٹس پر پابندی

بھارت میں مودی کی زیرقیادت فاشسٹ حکومت نے سکھوں کے خلاف تازہ ترین اقدام کرتے ہوئے سکھ برادری کے ارکان اور تنظیموں سے تعلق رکھنے والی 40 ویب سائٹس پر پابندی عائد کردی ہے۔ سکھ بھارت میں مسلمانوں کے بعد دوسری بڑی اقلیت ہے۔ کشمیرمیڈیاسروس کے مطابق اس سے قبل بھارت نے خالصتانی تنظیم کے ساتھ روابط رکھنے کے الزام میں سکھ برادری کے نو افراد کو دہشت گرد قرار دیا تھا۔اب بھارت نے مبینہ طور پر ایک تنظیم” سکھزفار جسٹس“ کی طرف سے چلائی جانے والی 40 ویب سائٹس کو بند کردیا ہے۔ بھارت کا کہنا ہے کہ یہ تنظیم بھارت میں سکھوں کی خاطر علیحدہ وطن کے لئے کام کر رہی ہے۔ امریکہ میں قائم خالصتان کی حامی تنظیم ” سکھز فارجسٹس“ نے اپنے” سکھ ریفرنڈم 2020 “کی حمایت کرنے والوں کے اندراج کے لئے ایک مہم کا آغاز کیا ہے۔ ایس ایف جے نے بھارت میں سکھوں کی خاطر آزاد وطن بنانے کے لئے ریفرنڈم پر زور دیا ہے۔یہ کھل کر خالصتان کی حمایت کرتی ہے اور اس عمل میں پنجاب پر بھارت کے کنٹرول کو چیلنج کرتی ہے۔

یہ بھی دیکھیں

سعودی عرب: دہشت گردی میں ملوّث داعش کے پانچ مشتبہ ارکان کو سزائے موت کا حکم۔ 

سعودی عرب: دہشت گردی میں ملوّث داعش کے پانچ مشتبہ ارکان کو سزائے موت کا …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے