اتوار 15 ذوالحجہ 1442ﻫ - 25 جولائی 2021

تعمیراتی منصوبے شروع کرنے کیلئے ادارہ تحفظ ماحولیات کی منظوری لازمی قرار

اسلام آباد: ہائی کورٹ وفاقی دارالحکومت میں کوئی بھی تعمیراتی منصوبہ شروع کرنے سے پہلے ادارہ تحفظ ماحولیات سے منظوری لینا لازمی قرار دے دیا۔

اسلام آباد ہائی کورٹ میں ماحولیاتی آلودگی کے خاتمے سے متعلق کیس کی سماعت کرتے ہوئے چیف جسٹس اطہرمن اللہ نے حکم دیا کہ اسلام آباد میں کوئی بھی تعمیراتی منصوبہ انوائرمنٹل پروٹیکشن ایجنسی کی منظوری کے بغیر شروع نہ کیا جائے۔

اسلام آباد ہائی کورٹ کے چیف جسٹس اطہرمن اللہ نے ریمارکس دیے کہ ہم ایسی اسٹیج پر پہنچ چکے ہیں کہ احتساب کا عمل شروع ہونا چاہیے۔

عدالت نے پاکستان انوائرمنٹل پروٹیکشن ایجنسی کو آزاد حیثیت میں ایکٹ کے مطابق کارروائی کرنے کا حکم دیا۔
سماعت کے دوران انوائرمنٹل پروٹیکشن ایجنسی، وفاقی نظامت تعلیمات اور وفاقی ترقیاتی ادارے (سی ڈی اے) کے نمائندے پیش ہوئے۔ سی ڈی اے کی طرف سے وکیل افنان کریم کنڈی عدالت میں پیش ہوئے۔

چیف جسٹس اسلام آباد ہائی کورٹ نے ریمارکس دیے کہ اسلام آباد میں سی ڈی اے ماحولیاتی قوانین کی مکمل خلاف ورزی کر رہا ہے۔ سی ڈی اے نے اسلام آباد میں نیشنل پارک کو بھی تباہ کردیا۔ نیشنل پارک سے متعلق سپریم کورٹ کا فیصلہ ہے ،سی ڈی اے اس کا بھی خیال نہیں رکھتی۔

یہ بھی دیکھیں

وزارتِ مذہبی امور نے کرونا وبا ء کےسلوگن کے حوالے سے نوٹیفکیشن جاری کردیا۔  حکام مذہبی امور

وزارتِ مذہبی امور نے کرونا وبا ء کےسلوگن کے حوالے سے نوٹیفکیشن جاری کردیا۔  حکام …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے