اتوار 15 ذوالحجہ 1442ﻫ - 25 جولائی 2021

وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ بیرون ملک مقیم پاکستانیوں کو ترسیلات زر کے حوالے سے ہرممکن سہولت کی فراہمی حکومت کی اولین ترجیح ہے۔

تفصیل کے مطابق ترسیلات زر اور غیر ملکی زرمبادلہ کے ذخائر میں اضافے کے بارے اسلام آباد میں ایک اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے وزیراعظم نے گزشتہ ماہ کے دوران بیرون ملک مقیم پاکستانیوں کی طرف سے بھیجی گئی رقوم میں نمایاں اضافے پر اطمینان کا اظہار کیا۔

وزیراعظم نے کہا کہ بیرون ملک مقیم پاکستانی ملک اور قوم کا اہم اثاثہ ہیں۔ انہوں نے وزارت خزانہ، ایف بی آر اور سٹیٹ بینک کے گورنر کو ہدایت کی کہ وہ ملک کی ترسیلات زر اور غیر ملکی زرمبادلہ کے ذخائر بڑھانے کیلئے مزید اقدامات تجویز کریں اور بیرون ملک تعلیم پاکستانیوں کی حوصلہ افزائی کریںگے وہ ملک کی معیشت کے استحکام میں فعال کردار ادا کریں۔

ادھر وزیراعظم نے اسلام آباد میں بجلی کے شعبے سے متعلقہ امور اور اس میں اصلاحات کے طریقہ کار کے بارے میں ایک اجلاس کی بھی صدارت کی۔

جاری اعلامیہ میں کہا گیا ہے کہ اجلاس میں بجلی کے شعبے سے متعلق امور، اصلاح اور تنظیم نو کے مجوزہ روڈ میپ پر تبادلہ خیال کیا گیا۔ اجلاس میں سرکلر ڈیٹ کے معاملے اور آئی پی پیز کے ساتھ بات چیت سمیت دیگر متعلقہ امور زیر بحث آئے۔

اعلامیہ کے مطابق وزیراعظم نے آئی پی پیز معاہدوں میں باہمی اتفاق رائے سے ہونے والی تبدیلیوں میں پیشرفت کو سراہا اور کہا معاہدوں میں نظر ثانی سے سرکلر ڈیبٹ کو کم کرنے میں مدد ملے گی۔

وزیراعظم کا کہنا تھا کہ بجلی کا شعبہ ملک کی معاشی نمو کو متاثر کر رہا تھا۔ صارفین پر موجودہ بوجھ کو کم کرنے کے لئے فوری طور پر بحالی اور اصلاحی عمل ضروری ہے۔

وزیراعظم نے پہلے سے منظور شدہ تنظیم نو روڈ میپ پر جلد عمل درآمد کی ہدایت کرتے ہوئے وفاقی وزیر عمر ایوب کو ہدایت کی کہ آئی پی پیز کے ساتھ معاہدوں کے بعد صارفین کو ممکنہ فوائد کے بارے میں آگاہ کریں۔

یہ بھی دیکھیں

وزارتِ مذہبی امور نے کرونا وبا ء کےسلوگن کے حوالے سے نوٹیفکیشن جاری کردیا۔  حکام مذہبی امور

وزارتِ مذہبی امور نے کرونا وبا ء کےسلوگن کے حوالے سے نوٹیفکیشن جاری کردیا۔  حکام …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے