ہفتہ 26 رمضان 1442ﻫ - 8 مئی 2021

‏ہمیں ڈیفالٹ کاخطرہ تھا،مشیرخزانہ حفیظ شیخ

ہم نے قرض لے کر خودکوبہت کمزورکرلیاتھا۔ حکومت نےبڑےفیصلےکیے،آئی ایم ایف سےتعلق بنایا۔ ‏دوست ممالک نےآگےبڑھ کرہماری مددکی۔5 ہزارارب روپےماضی میں لیاگیاقرض اداکیا۔فیصلہ کیاتھا آزاد بنیادپرپاکستان کوآگےلےکرجاناہے۔ 20 ارب ڈالرخسارہ کوکم کرکے 3 ارب کردیاگیا۔ ‏حکومت نےایکسپورٹس بڑھانےکیلئےمراعات دیں۔

رواں سال اسٹیٹ بینک سےکوئی قرض نہیں لیا۔ ٹیکسزکےنظام کوبہترکرنےکی کوشش کی۔ ملکی تاریخ میں پہلی بارحکومت نےاخراجات میں کمی کی۔ ‏صدراوروزیراعظم ہاؤس کےفنڈزکم کیےگئے۔ ہم نےکسی ادارے،کسی وزارت کوسپلیمنٹری گرانٹ نہیں دی۔ کورونا کی وجہ سےٹیکس ریونیومتاثرہوا۔

‏ملکی تاریخ میں پہلی بار 250 ارب روپےلوگوں کودیئےگئے۔ کورونا سےبےروزگارہونیوالوں کونقدامداددی گئی۔ زراعت کیلئے 280 ارب روپےکاپیکج دیا۔ حکومت نےکاروباری طبقےکوسستےقرضےفراہم کیے، ،مشیرخزانہ حفیظ شیخ

یہ بھی دیکھیں

وزیراعظم عمران خان کا بے گھر افراد کو چھت کی فراہمی کا وعدہ پورا ہونے لگا۔ 

وزیراعظم عمران خان کا بے گھر افراد کو چھت کی فراہمی کا وعدہ پورا ہونے …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے