جمعرات 16 صفر 1443ﻫ - 23 ستمبر 2021

رواں مالی سال کے لئے غیرملکی قرضوں کے تخمینے کا کل حجم 14 اعشاریہ 37 ارب ڈالر رکھا گیا تھا،ترجمان ۔ 

 

اسلام آباد: (ویب مانیٹرنگ ڈیسک) رواں مالی سال کے لئے غیرملکی قرضوں کے تخمینے کا کل حجم 14 اعشاریہ 37 ارب ڈالر رکھا گیا تھا،ترجمان وزارت اقتصادی امور۔

جولائی تا نومبر 2020ءکے دوران صرف ساڑھے 4ارب ڈالر قرضے موصول ہوئے ہیں۔ جولائی تا نومبر 2020ءدورانیہ میں2 اعشاریہ 9 ارب ڈالر بیرونی قرضوں کی مد میں ادائیگیاں کی گئیں، رواں مالی سال کے بجٹ میں تخمینے کے مطابق حکومت پاکستان کو بیرونی قرضوں کی مد میں 11 اعشاریہ 39 ارب ڈالر ادا کرنا ہوں گے۔ موجودہ حکومت کے عرصہ اقتدار (اگست 2018 ءتا نومبر 2020ء) میں کل بیرونی قرضوں کا حجم26 اعشاریہ 6 ارب ڈالر رہا۔ اسی رقم میں سے 23 اعشاریہ 3 ارب ڈالر بیرونی قرضوں کی مد میں ادائیگیاں بھی کی گئیں۔ درست اعدادوشمار کے مطابق کل عرصہ اقتدار کا مجموعی قرض 3 اعشاریہ 2 ارب ڈالر بنتاہے۔ موجودہ حکومت روز اول سے ملکی وسائل پر زیادہ سے زیادہ انحصار کرنے کی پالیسی پر گامزن ہے، ترجمان وزارت اقتصادی امور

یہ بھی دیکھیں

وزارتِ مذہبی امور نے کرونا وبا ء کےسلوگن کے حوالے سے نوٹیفکیشن جاری کردیا۔  حکام مذہبی امور

وزارتِ مذہبی امور نے کرونا وبا ء کےسلوگن کے حوالے سے نوٹیفکیشن جاری کردیا۔  حکام …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے